aditi rao hydari 84

معروف بھارتی اداکارہ ادیتی راؤ نے بھارتی فلم انڈسٹری کا شرمناک چہرہ بے نقاب کردیا

معروف بھارتی اداکارہ ادیتی راؤ نے بھارتی فلم انڈسٹری کا شرمناک چہرہ بے نقاب کردیا

ممبئی(ویب ڈیسک) بالی ووڈ کی معروف اداکارہ ادیتی راؤ حیدری نے انڈسٹری میں قدم رکھنے سے قبل اپنے ساتھ جنسی استحصال سے متعلق اہم انکشاف کیا ہے۔

گزشتہ دنوں ایک سروے کے مطابق بھارت کو خواتین کے لئے سب سے زیادہ غیر محفوظ ملک قرار دیا گیا ہے جس کی بنیادی وجہ بھارت میں آئے دن خواتین کو حراساں کرنے اور زیادتی کا نشانہ بنانے کے واقعات کا رپورٹ ہونا ہے اور اس کا اعتراف بالی ووڈ انڈسٹری کی کئی اداکارائیں کرچکی ہیں جب کہ حال ہی میں اداکارہ ادیتی راؤ حیدری نے بھی اس حوالے سے اہم انکشاف کیا ہے

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق روک اسٹار ، مرڈر تھری اور پدماوت جیسی مشہور فلموں میں اداکاری کے جوہر دکھانے والی معروف اداکارہ ادیتی راؤ حیدری نے جنسی استحصال پر بات کرتے ہوئے کہا کہ ’فلم نگری میں آنے کے لیے میں بھی جنسی استحصال کا سامنا کر چکی ہوں لیکن میں اس قابل تھی کہ میں اس کے خلاف کھڑی رہی اور ڈٹ کا اس کا سامنا کیا اور اپنے آپ کو اس عمل سے دور رکھا تاہم مجھے اس کا بھاری نقصان اٹھانا پڑا۔

اداکارہ کا کہنا تھا کہ ’میں کام نہ ملنے کی وجہ سے بہت روئی، لیکن کبھی اپنے فیصلے پر افسوس نہیں کیا بلکہ مجھے اس بات پر افسوس ہوا کہ ہر نئی لڑکی کو فلم انڈسٹری میں جنسی استحصال کا سامنا کرنا پڑتا ہے جب کہ یہاں لڑکیوں کے ساتھ کس طرح کا رویہ رکھا جاتا ہے اس بات کا اندازہ مجھے خود پر بیتنے کے بعد با خوبی ہوگیا ہے۔

ادیتی نے مزید انکشاف کیا کہ ’میرے انکار کرنے کے بعد مجھے 8 ماہ تک کوئی کام نہیں ملا لیکن اس کے باوجود میں نے ہار نہیں مانی کیوں کہ مجھے احساس تھا کہ میرا یہ فیصلہ مجھے میرے اور کام کرنے میں مضبوط تر بنائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں