Poetry Pics Sad 0 659

شاعری تصویر دکھی Poetry Pics Sad


دیکھوں ہوں تجھ کو دور سے بیٹھا ہزار کوس

عینک نہ چاہئے نہ یہاں دوربیں مجھے

دنیائے تصور ہم آباد نہیں کرتے

یاد آتے ہو تم خود ہی ہم یاد نہیں کرتے

ہاں دکھا دے اے تصور پھر وہ صبح و شام تو

دوڑ پیچھے کی طرف اے گردش ایام تو

اک تری یاد سے اک تیرے تصور سے ہمیں

آ گئے یاد کئی نام حسیناؤں کے

اس قدر محو تصور ہوں کہ شک ہوتا ہے

آئینے میں مری صورت ہے کہ صورت تیری

جی ڈھونڈتا ہے پھر وہی فرصت کہ رات دن

بیٹھے رہیں تصور جاناں کیے ہوئے

Poetry Pics Sad 7

جو تصور سے ماورا نہ ہوا

وہ تو بندہ ہوا خدا نہ ہوا


Poetry Pics Sad 8

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں