43

صدی کے طویل ترین چاند گرہن کا آغاز

کراچی: پاکستان سمیت دنیا بھر میں صدی کے طویل ترین چاند گرہن کا آغاز ہوگیا ہے، اس صدی کا سب سے طویل چاند گرہن پاکستان سمیت دنیا بھر میں دیکھا جارہا ہے۔
moon11-750x369

جولائی کا مہینہ جاتے جاتے پاکستان بلکہ دنیا بھر میں فلکیات کے شیدائی افراد کو دو تاریخی واقعات کا تحفہ دینے والا ہے۔ 27 جولائی 2018 کی شب کو اس صد ی کا طویل ترین چاند گرہن رونما ہوگا جس میں گرہن طویل ہونے کے ساتھ ہی کچھ وجوہات کی بنا پر سرخی مائل دکھائی دیگا ۔ اس شب زمین اور مریخ ایک خاص پوزیشن پر ہوں گے اور جس کی وجہ سے چاند اور مریخ پوری رات ساتھ ساتھ سفر کرتے دکھائی دیں گے۔ اس کے بعد 31 جولائی کی شب مریخ تقریبا 15 سال بعد زمین کے نزدیک ترین مقام پر ہونے کے باعث معمول سے کافی بڑا دکھائی دے گا۔ آخری مرتبہ اگست 2003 میں مریخ اس مقام پر آیا تھا۔
Moon1post

سورج ، چاند ،ستارے اور دیگر فلکیاتی اجسام ابتدا ہی سے انسانی تجسس اور توجہ کا مر کز رہے ہیں ، خاص طور پر سورج اور چاند گرہن کے متعلق دنیا کی ہر تہذیب میں مختلف عقائد و تصورات پائے جاتے تھے۔ اور موجودہ جدید دور میں بھی انھیں نحوست کی علامت سمجھا جاتا ہے۔ جیسا کہ ہم جانتے ہیں کہ ایک مکمل گرہن اس وقت رونما ہوتا ہے جب زمین اپنے مدار میں گردش کرتے ہوئے کچھ وقت کے لیے سورج اور چاند کے درمیان حائل ہوجاتی ہے، زمین کا جو سایہ چاند پر پڑتا ہے فلکیاتی اصطلاح میں اسے ‘امبرا ‘کہا جاتا ہے۔ اسی کے باعث گرہن کے دوران بعض اوقات چاند سرخی مائل ، نارنجی یا خونی دکھائی دیتا ہے اور مکمل گرہن کے وقت بھی چاند دکھائی دے رہا ہوتا ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں