hindi romantic shayari 347

واٹس ایپ شاعری whatsapp shayari

وہ آج برسوں بعد ملا تو گلے لگ کے خوب رویا,,.
“” ‏
یہ وہی تھا جس نے کہا تھا تیرے جیسے ہزاروں ملیں گے..


اب تو مدت سے__ مُیسر ہی نہیں تازہ سُخن

ہائے اُس شخص کی باتوں سے مہک آتی تھی


نہ خواہشیں نہ ہی جستجو پس آئینہ میرے روبرو …!!

تیرے واسطے میں کچھ نہیں میرے واسطے بس توں ہی توں…!!


: #دل کمليا روندا کيوں ايں ؟

يار ياراں نوں چهڈدے رہندے نے….


ﺍﮐﯿﻠﮯ ﮨــــــــﻢ ﮨﯽ ﺷﺎﻣﻞ ﻧﮩﯿﮟ ﺍﺱ جرم محبت میں.
💕💕💕
ﻧﮕﺎﮦ ﺟﺐ ﺑﮭﯽ ﻣﻠﺘﯽ ﺗﮭﯽ ﻣﺴﮑﺮﺍﯾﺎ ﺗــــــﻢ ﺑﮭﯽ ﮐﺮتے تھے


کتنا عجیب رشتہ ہے نا یہ محبّت کا صاحب
دل تکلیف میں ہے اور تکلیف دینے والا دل میں


تقدیر کے قاضی سے کیا پوچھیں قسمت اپنی

وہ شخص خود ہی کہہ گیا ہے تیرا نہیں ہوں میں۔


تُو پہلو جوڑ کے بیٹھا رہا رقیب کے ساتھ
میں اِس ادا پے تیرا اور بھی دِیوانہ ہوا !!


یادوں کی قیمت مت پوچھو اُس سے
جو یادوں کو خود ھی مٍٹا دیتے ھیں

یادوں کی اھمیت ذرا پوچھو اُن سے
جو یادوں میں زندگی بٍتا دیتے ھیں


ھم تو ھر بات کو خدا پر چھوڑ دیتے ھیں،

ٹوٹے نہ دل کسی کا دل اپنا توڑ دیتے ہیں,

ھم بھی انسان ھیں کوئی پھتر تو نہیں،

کیوں لوگ ھم کو یوں تنہا چھوڑ دیتے ھیں.‏‎


‏بڑی بھیانک ہوتی ہیں عشق کی سزائیں

بندہ پل پل مرتا ہے مگر موت نہیں آتی….!!


کون کہتا ھے کہ تیری یاد سے بے خبر ھوں میں,

میری آنکھوں سے پوچھ میری رات کیسے گزرتی ھے.


میری عمر تیرے خیال میں گزری

اور میرا خیال تجھے عمر بھر نہ آیا


کوئی حَسرت بھی _ مُکمل نہیں ہونے پائی
تُجھے کھو دینا بھی جیون کا اَدھورا دُکھ ہے،💔


‏الفــــــاظ تو سب__ __ ہی سمــــــجھ لیتــــــے ہیں


مــــــزہ تو تب ہے کہ کوئی خاموشــــــیاں بھی سمجھے..‏‎.‎😕


بات کب عِشق کی ھونٹوں سے بیاں ھوتی ھے
عِشق ھوتا ھے تو آنکھوں میں زباں ھوتی ھے


شعروں میں پرو دیتا ہوں _دل کے سبھی درد
اس کے سوا ___ کوئی چارہ بھی تو نہیں…


پوچھنے لگے ہم سے____ آج کل کہاں رہتے ہو

ہم نے بھی بڑی معصومیت سے جواب دیا اپنی اوقات یں


چرچے خاص ہو تو__قصے بھی ضرور ہوتے ہیں

انگلیاں بھی ان پر ہی اٹھتی ہے جو مشہور ہوتے ہیں


مجھے نہ کسی دل,نہ کسی کی جان چاہیے…….

دل کا حال جو سمجھ سکے,وہ انسان چاہیے


مطلب کی دنیا تھی اس لیے چھوڑ دیا سب سے ملنا

ورنہ یہ چھوٹی سی عمر تنہاہی کے قابل نہ تھی


اتنے پیار سے چاہا جائے تو پتھر بھی اپنےہو جاتے ہیں

::”ساقی”::
” . “
ناجانے یہ مٹی کے انسان اتنےمغرور کیوں ہوتے ہیں.‏‎


ہاتھ تھاما ہے تو مجھ پر بھروسہ بھی رکھنا…

ڈوب جاؤں گا تمہیں ڈوبنے نہیں دوں گا…!!


اب جیت بهی جاؤں تو دل خوش نہیں هوتا……..!!!

جس شخص کو هارا هے وه انمول بہت تها……….!!!


پریشان دل کو اور بھی پریشان نہ کر
اگر عشق ہے تو عشق کر، احسان نہ کر


ہزاروں میں سے مجھے اک ایسے شخص کی تلاش ہے!!
جو میری غیر موجودگی میں میری برائی نہ سن سکے✌🏻


ہزاروں میں سے مجھے اک ایسے شخص کی تلاش ہے!!
جو میری غیر موجودگی میں میری برائی نہ سن سکے✌🏻


ہزاروں میں سے مجھے اک ایسے شخص کی تلاش ہے!!
جو میری غیر موجودگی میں میری برائی نہ سن سکے✌🏻


دو دن ہنس کے ملتے ہیں پھر بھول جاتے ہیں

یہ لوگ مطلب کی حد تک کتنا پیار کرتے ہیں


اب یہ بھی نہیں ٹھیک کہ ہر درد مٹا دیں

کچھ درد کلیجے سے لگانے کے لیے ہیں


تیرے بعد نہ آئے گا میری زندگی میں کوئی اور…!!

بس اک موت ہے جس کی ہم قسم نہیں دیتے…!!!


اس قدر ادھار لے کر کھایا ہے میں نے😛_____
کہ دکاندار بھی میرے جینے کی دعائیں کرتے ہیں 😂😂


ابتدائی خواہشوں میں کون سی پُوری ہوئی !!

چل مُجھے سُولی چڑھا، اب آخری خواہش نہ پوچھ !!


دنیا کے اس ہجوم میں تنہا نہ کیجیۓ 🔥
سنیئے…!! قسم سے.. آپ تو ایسا نہ کیجیۓ :”)


جب دل میں کوئی ہڈی نہیں ہے
تو یہ کمبخت ٹوٹ کیسے جاتا ہے


چلے ہی جائیں گے تیری محفل سے
بس یہ تھوڑے چاول تو کھا لینے دو


سنا ہے ان کی گفتار سے زخم بھر جاتے ہیں،،،،
جو درد کو عشق میں ہنس کر پی جاتے ہیں،،،،


ہم سے بھی پوچھ لو کبھی حال دل جناب __!!

کبھی ہم بھی کہہ سکیں کہ دعا ہے آپ کی __!!


تیرے آنے سے کچھ ﺫرا پہلے

بات تجھ سے ہی کر رہا تھا میں


جب تنی سلاخوں سے جھانکتی ہے تنہائی
دل کی طرح پہلو سے لگ کے بیٹھ جاتے ہو


شمع بھی کم نہیں کچھ عشق میں پروانے سے
جان دیتا ہے اگر وہ تو یہ سر دیتی ہے


“حیران ہاں شاکر قسمت تے”

“اساں ھر دے ھاں ساڈا کوئی وی نئی.


“لو ہم نے ڈھال لیا خود کو اس کے پیکر میں،

لو ہم نے ہجرکے عرصے کو بھی وصال کیا،

تمھارے ہجرمیں مرنا تھا کون سا مشکل؟

تمھارے ہجر میں زندہ ہیں یہ کمال کیا.”


عــــشـــق”_ایک مصرعے میں سُن لیجئے

دِل کے میلے میں_____موت کا کنواں


نا جانے کیوں اتے ھیں…………. زندگی میں وہ لوگ???

وفاٸیں کر نہیں سکتے ………… باتیں ہزار کرتے ہیںM


‏لَوٹ بھی آئیں تو__، پہلے سے کہاں رہتے ہیں..

مَیں نے بچھڑے ہوۓ لوگوں پہ، بہت سوچا ہے.. ! :


مجھے مجبور کرتی ہیں تمھاری یادیں ورنہ
شاعری کرنا اب مجھے خود اچھا نہیں لگتا


‏تراش لیتا ہوں لفظوں سے لوگوں کے دلوں کو

میں نے یہ ہنر سیکھا ہے بہت ہی آوارگی کے بعد ..


مِل جاٸیں جو تیری قُربت کے __ کُچھ لمحے ___؛؛؛
باقی کی ساری زندگی _ مَیں خیرات کر دوں ___؛؛؛


جب یاد آئیں گی تم کو وفائیں میری..

ہر شخص کو چاہت سے دیکھا گرو گے تم…


اس نے اپنے ہونٹوں سے چھو کر دریا کا پانی گلابی کر دیا

ہماری تو بات اور تھی،اس نے تو مچھلیوں کو بھی شرابی کر دیا,,,,,,,


تن کالا قبول اے بلھیا

من کالا کسے کم دا نئیں


کیسے دور جہـــالت میں”جــی”رھے ھیں” ھـــــم بھی”

” اقبـــــــال”

یہــاں “آدم” کا بیٹــا خـــوش ھوتا ھے “حــــوا” کی بیٹـی کو “بےنقـــاب” دیکھ کر.‏.


سارا شھر میری دیوانگی سے واقف رھا مگر،
ایک شخص کی آنکھوں سے بے اعتباری نه گئی.


اس شخص کو جدا ہونے کے بھی ڈھنگ نہیں آتے

بچھڑ کے مجھ سے میرے رابطوں میں رہتا
ہے—!


ہے تبسم ہمارے لب پے ابھی

کس نے کہا ہم زندگی سے ہارے ہیں۔


مت پوچھو کہ میرا ۔۔۔۔کارو بار کیا ھے

محبت کی چھوٹی سی دوکان ھے نفرت کے بازار میں


ہاتھ رکھو دل پہ میرے اور قسم کھا کے بتاؤ،

کیا میری طرح تمہیں چاہنے والا کوئی ہے


جن کے ہاں دولت کا شجر لگتا ہے
اُن کا تو ہر عیب ہنر لگتا ہے


کیسے دور جہـــالت میں”جــی”رھے ھیں”


ھـــــم بھی”

” اقبـــــــال”

یہــاں “آدم” کا بیٹــا خـــوش ھوتا ھے “حــــوا” کی بیٹـی کو “بےنقـــاب” دیکھ کر.‏.


اس شخص کو جدا ہونے کے بھی ڈھنگ نہیں آتے

بچھڑ کے مجھ سے میرے رابطوں میں رہتا
ہے—!


مت پوچھو کہ میرا ۔۔۔۔کارو بار کیا ھے

محبت کی چھوٹی سی دوکان ھے نفرت کے بازار میں


ہاتھ رکھو دل پہ میرے اور قسم کھا کے بتاؤ،

کیا میری طرح تمہیں چاہنے والا کوئی ہے


جن کے ہاں دولت کا شجر لگتا ہے
اُن کا تو ہر عیب ہنر لگتا ہے


ایک چاہت ہوتی ہے اپنوں کے ساته جینے کی جناب
ورنہ پتا تو سب کو ہے کے مرنا تو اکیلے ہی ہے


عشق میں اس لیےدھوکہ کھانےلگےہیں لوگ

‏روح کی جگہ جسم کو چاہنے لگے ہیں لوگ


ارادہ قتل کا تھا تو سر قلم کر دیتے تلوار سے …..

کیوں عشق میں ڈال کے تم نے ہر سانس پہ موت لکھ دی…..


تم جو میری سانس بنی ہوئی ھو
تم جوچھوڑ گی تومیرا کیا ھوگا


کوئی بھی نہیں تھا میرے پاس دلاسے کیلئے

میں اپنی ہی بانہوں میں سر رکھ کے رو پڑا !


ہمارے بعد تیرے عشق میں نئے لڑکے
بدن تو چومیں گے زلفیں نہیں سنواریں گے


ﮔﻣﺎﻥ کیجیئے ، کتنا ﺑﺮﺍ ﺯﻣﺎﻧﮧ ہے،،

ﺁﺝ ہم بھی ﺍﭼﮭﻮﮞ میں ﺷﻤﺎﺭ ہوﺗﮯ ﮨﯿﮟ___!


حشر میں بھی وہ کیا,ملیں گے ہمیں
جب ملاقات عمر بھر نہ ہوئی…!!!


میری زندگی میں کتابیں نہ کھلونے آۓ

خواہش رزق نے چھینا میرا بچپن مجھ سے


کبھی رات بھر کے جھگڑے
کبھی چاہتوں کی باتیں
وہی آپ ہی کے قصے
وہی آپ ہی کی باتیں

وہ ملا ہے مجھ کو
اکثر سرِ راہ چلتے چلتے
وہی اجنبی نگاہیں
وہی بے رُخی کی باتیں

نہ سمجھ سکا جہاں میں
کوئی۔۔۔۔ میرا درد یارو
میرے غم کو لوگ سمجھے
میری شاعری کی باتیں

کوئی ہم کو یہ بتائے
‏کہ یہ جنون نہیں‌تو کیا ہے
ملے جب بھی ہم کسی سے
تو کریں‌ آپ ہی کی باتیں

میرے خیال پر وہ یوں ہی
کچھ ایسے مسکرائے
ہم سُنا رہے ہوں‌جیسے
کسی اجنبی کی باتیں۔۔!!


نظر سے دور رہ کر بھی کسی کی سوچ میں رھنا

کسی کے پاس رھنے کا طریقہ ھو تو تم سا ھو


ترے قرب نے جو بڑھا دیئے کبھی مٹ سکے نہ وہ فاصلے
وهی پاؤں هیں ، وهی آبلے ، وهی اپنا ذوقِ سفر بھی هے ………!!!
❤معصوم❤


اب تو خود سے بھی ملنے کو جی نہیں کر تا….

بہت برے ہیں ہم۔۔۔۔۔۔کچھ اپنوں سے سنا ہے میں نے….


وفا کی موج مستی میں ابھی بھی بادشاہ ہیں ہم…!!!!

جو دل کو توڑ دیتے ہیں ہم ان کو چھوڑ دیتے ہیں..!!!


کدی پیار نئی مکدا دلاں وچوں💕

ساہ مکدے مکدے مک جاندے


Rooth Janay Ki Ada Ham Ko Bi Ati Hay Faraz

Kash Hota Koi Ham Ko Bi Mnane Wala


Kon Preshan Hota Hai Tere Gham Se Faraz

Wo Apni Hi Kisi Baat Pe Roya Ho Ga


Koi Khamosh Ho Jaye Tu Ham Tarap Jate Hain Faraz

Ham Khamosh Hoye Tu Kisi Ne Haal Tak Na Pocha


Kisi Se Juda Hona Agar Itna Asan Hota

Faraz

Tu Jism Se Roh Ko Lene Kabi Farishte Nahi Aate


🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸

Shayad Tu Kabi Pyasa Meri Tarf Lot Aye Faraz

Aankhon Mein Liye Phirta Hon Darya Teri Khatir


Aesi Tareekyan Aankhon Mein Basi Hai Ke Faraz

Raat Tu Raat Hai Ham Din Ko Jalate Hain Chiragh


جومیں سچ کہوں تو برا لگے، جو دلیل دوں تو ذلیل ہوں_

یہ سماج جہل کی زد میں ہے، یہاں بات کرنا حرام ہے _


ہوئے بدنام مگر پھر بھی نہ سدھر پائے ہم۔۔۔!!!

پھر وہی شاعری؛ پھر وہی جاگنا؛ پھر وہی عشق؛ پھر وہی تم۔۔۔۔۔!!!


اب وہ حالات ہیں کہ ذِلت بھی گوارہ ہے مجھے

ذِندگی تو نے کہاں گھیر کے مارا ہے مجھے💔


ہمارا کچھ تو واسطہ ھے تم سے۔۔۔
ورنہ ایسے نہ تڑپتےتیرے قرب کے لیے۔۔۔ 💔


عشق کیا زندگی دے گا کسی کو…!!!💞💞💞

یہ تو شروع ہی کسی پر مرنے سے ہوتا ہے💞💞💞


میرے لفظوں میں ہے تعریف ایک چہرے کی

جس کی مسکراہٹ سے چلتی ہے شاعری اپنی


‏عشق فقیری جد لگ جائے ، پاک کرے ناپاکاں نوں

عشق دی آتش لے جاندی اے عرشاں تیکر خاکاں نوں


‏دریا کے اُس طرف جو تُو بیٹھا دکھائی دے,,,

پھر کیا کسی کو بیچ میں دریا دکھائی دے…!!


مکتب عشق سے ہر کوئی واقف نہیں…!!!

پالینا ہی عشق نہیں ” فنا ” ھونا بھی عشق ہے…!!!


دوستــی دل سے ہو تو
“وفـــــا” بن جاتی ہے

دوستــی محبت سے ہو
تو “پيـار” بن جاتی ہے

دوستی انجان سے ہو تو
“پہچان” بن جاتی ہے
اور

دوستــی اچهے انســان سے ہو تو
” زندگی” بن جاتی ہے “


تنھا رھنا سیکھ رھا ھوں مرکر جینا سیکھ رھا ھوں
صبر کو اپنی راہ بناکر کانچ پے چلنا سیکھ رھا ھوں

پھرتے پھرتے صحرا میں پیاس کو پینا سیکھ رھا ھوں
جینے کے ھیں عجب تقاضے زندہ رھنا سیکھ رھا ھوں


دیکھ لینا یہ ستم اک دن مٹا دیں گے مجھے
تم یہ کہتے ہوئے رہ جاو گے یہ کیا ہو گیا


جاگنے والو آؤ مل کے غم باٹیں__!

شائد نیند کو رحم آجائے….!!


نہ خواهشیں نہ جستجو___پس آئینه میرے روبرو
تیرے واسطے میں کچھ نهیں__میرے واسطے بس تو ہی تو …


داور ِ حشر ، مِرا نامئہ اعمال نہ دیکھ !
اس میں کچھ پردہ نشینوں کے نام بھی آتے ہیں


“جس طرح ٹوٹ کے گرتی ہے زمیں پر بارش”🌨💧

“اس طرح خود کو تیری ذات پہ مرتے دیکھا”


تیرے درد کی انتہا ہوئی تو دل بھی منافق مذاج ہو گیا،

آج دل چاہتا ہے کہ _ محبت _ کو گناہِ کبیرہ لکھوں۔۔۔


مجھے محبت۔۔۔اٌن تمام حروف سےہے #ماہی❤❤

جو تمہارے نام میں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ آتے ہیں❤❤


زندگی محتاج نہیں منزلوں کی وقت ہر منزل دکھا دیتا ہے

NW……….!!

مرتا نہیں کوٸ کسی سے جدا ہو کر وقت سب کو جینا سکھا دیتا ہے


اب میرے عیب تو نہ___گنواؤ
مجھ کو احساس هے___ بُرا هوں میں
#


تیـــرے لَبــــ سے جـو ادا ہـوتـے ہیـں ♡

نصیبـــــ اُن لفظوں کے بھی کیا ہـوتے ہیـں ♡


اپنی تو محبت کی بس اتنی کہانی ہے
ٹوٹی ہوئی کشتی ہے ٹھہرا ہوا پانی ہے

ایک پھول کتابوں میں دم توڑ چکا ہے
کچھ یاد نہیں آتا یہ کس کی نشانی ہے


مجھ کو فرصت کہاں بارش کا موسم سہانا دیکھوں ..
میں تیری یادوں سے نکلوں __ تو زمانہ دیکھوں ..


محمد نعیم

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں